Skip to main content
Lyrics

Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

By July 6, 2019No Comments

Ye Jhalak Akhtar e Burj e Taqwa Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai
Raushni Unke Zaat e Mujalla Ki  Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Rehmato Ke Kohan Jagmagane Lage
Sunniyat Ke Chaman Muskurane Lage
Kya Mahek Us Gul e Qadriya Ki  Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Gungunate Chalo Nagme Gaate Chalo
Apne Murshid Ke Dar Muskurate Chalo
Ye Sada Un Ke Har Ek Shayda Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Sab Deewane Chale Gham Mitaane Chale
Un Ke Dar Apni Bigdi Banane Chale
Sab Pe Chashm e Karam Us Maseeha Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Ilm Ke Chand Taaro Ki Baraat Hai
Aur Mubarak Salamat Ki Saugaat Hai
Waah Kya Shaan Us Razvi Dulha Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Maut Se Pehle Hi Apne Keh Diya
Akhtar e Qadri Khuld Me Chal Diya
Ye Zabaa Ek Jannat Raseeda Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

BaadShahe Sukhan Taajdar e Qalam
Sab Ne Mana Unhein Kya Arab Kya Ajab
Aaisi Ranaayi Mehmaan e Kaaba Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Naaib e Noori Aur Jaanashin e Raza
Ilm O Hikmat Me Hai Wo Ameen e Raza
Shaan Kya Us Shah e Bazm e Ifta Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Shah Asjad Ke Andaaz Ko Dekhiye
Aap Ke Chehra e Naaz Ko Dekhiye
Hoo Ba Hoo Sab Jhalak Un Ke Baba Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Ya Khuda Ye Gharana Salamat Rahe
Haq Ka Ye Ashiyaana Salamat Rahe
Is Chaman Me Mahek Baag e Taiba Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Gaus O Khwaja Raza Hamid o Mustafa
Un Ke Ashiq Pe Hai Sab Ka Daste Ataa
Kya Pazeerayi Us Dar Ke Magta Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Baag e Dil Khil Utha Shaak Par Phal Pade
Aya Unka Bulawa To Hum Chal Pade
Fikr Ab To Rukawat Ka Bandha Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Har Bala Har Musibat Utar Jayegi
Zindagi Ek Pal Me Sawarjayegi
Baat Bas Fakhr e Azhar Ki Kirpa Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Leke Aaya Fareedi Jo Nazr e Sukhan
Kiyun Na Jhoome Ise Sun Ke Ahl e Sunann
Manqabat Ye Raza Ke Nabeera Ki Hai
Dhoom Ye Urs e Taajushshriah Ki Hai

Maulana Salman Raza Fareedi Misbahi

یہ جھلک اخترِ بُرجِ تقوٰی کی ہے
دھوم یہ عرسِ تاج الشریعہ کی ہے
روشنی انکی ذاتِ مُجلّٰی کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

رحمتوں کے گُہَر جگمگانے لگے 
سنیت کے چمن مسکرانے لگے
کیا مہک اُس گُلِ قادریّہ کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

گُنگناتے چلو ، نغمے گاتے چلو
اپنے مرشد کے در، مسکراتے چلو
یہ صدا ان کے ہر ایک شیدا کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

سب دیوانےچلیں، غم مٹانے چلیں
اُن کے در اپنی بگڑی بنانے چلیں
سب پہ چشم کرم اُس مسیحا کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

علم کے چاند تاروں کی بارات ہے
اور مبارک سلامت کی سوغات ہے 
واہ کیا شان اس رضوی دولھا کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

موت سے پہلے ہی آپ نے کہدیا
اخترِ قادری خلد میں چل دیا
یہ زباں ایک جنت رسیدہ کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

بادشاہِ سخن ، تاجِدارِ قلم
سب نےمانا اُنھیں، کیا عرب کیا عجم
ایسی رعنائ مہمانِ کعبہ کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

نائبِ نوری اور جانشینِ رضا
علم وحکمت میں ہیں وہ امینِ رضا
شان کیا اُس شہِ بزمِ افتا کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

شاہ عسجد کے انداز کو دیکھیے
آپ کے چہرۂ ناز کو دیکھیے
ہوبہٗو سب جھلک ان کے بابا کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

یاخدا یہ گھرانہ سلامت رہے
حق کا یہ آشیانہ سلامت رہے
اِس چمن میں مہک، باغ طیبہ کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

غوث وخواجہ رضا، حامد و مصطفی
اُنکے عاشق پہ ہے سب کا دستِ عطا
کیا پَزیرائ اُس در کے منگتا کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

باغِ ہستی یقینا نکھر جائے گا
بحر غم ایک پل میں اتر جائے
بات بس فخر ازہر کی کِرپا کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

لے کے آیا فریدی جو نذرِ سخن
کیوں نہ جھومیں اسے سن کے اہل سنن
منقبت یہ رضا کے نبیرہ کی ہے

دھوم یہ عرس تاج الشریعہ کی ہے

از محمد سلمان رضا فریدی صدیقی مصباحی، بارہ بنکوی. مسقط عمان

Admin
Owais Razvi Qadri Siddiqui
???? ????ℯ?? 
Learn More Visit ?www.NaatAcademy.com
#NaatAcademy 
#OwaisRazvi 
#KalameAalahazrat
#Tajushriya #تاج_الشریعہ
#اختر_رضا #حضور_تاج_الشریعہ
#درودشریف #درودوسلام #یوم_درودوسلام
#نعت_رسول #نعت_نبی #نعت_پاک #منقبت
#کلام_اعلی_حضرت
#اویس_رضوی