Skip to main content
نعت

اے باد صبا ان کے روضے کی ہوا لے آ

By July 9, 2021No Comments

اے باد صبا ان ﷺ کے روضے کی ہوا لے آ
ہم ہجر کے ماروں کی طیبہ سے دوا لے آ

تن من کو ہمارے جو ایماں کی جِلا بخشے
سرکار ﷺ کی نگری سے وہ خاکِ شفا لے آ

صدیق سے سچائی، فاروق سے بے باکی
عثمان سے فیاضی حیدر سے ولا لے آ

ایثار حسن سے اور شبیر سے قربانی
اجمیر کے خواجہ سے وہ خوف خدا لے آ

میں عشقِ شہِ دیں میں ہو جاؤں فنا اک دن
ہر سومری شہرت ہو کچھ ایسی کلا لے آ

حسنین و علی زہرا کا سایہ رہے مجھ پر
نورانی گھرانے کی نورانی ضیا لے آ

ہوں غرق گناہوں میں، اعمال ہیں بد میرے
آقا ﷺ سے شفاعت کا فرمان ذرا لے آ

آقا ﷺ کے غلاموں کے دل جن سے چمک اٹھیں
کرنیں ہرے گنبد کی اے باد صبا لے آ

دنیا مری بن جائے، عقبیٰ بھی سنور جائے
آمین کہیں قدسی وہ حرفِ دعا لے آ

نعتِ شہِ طیبہ ہے، پیشہ میرا آبائی
نظمیؔ کی کمائی میں برکت کی دعا لے آ

نظمی میاں مارہروی