Skip to main content
نعت

یہ عرشِ بریں ہے کہ مدینے کی زمیں ہے

By August 23, 2021No Comments

یہ عرشِ بریں ہے کہ مدینے کی زمیں ہے
ساجد ہیں فرشتے بھی جہاں میری جبیں ہے


ہر ایک تڑپ رُوکشِ فردوس بریں ہے
محبوبﷺ! تِرا درد بھی کس درجہ حسیں ہے


جو بھی ہے گدا آپﷺ کا ہِر پھر کے یہیں ہے
سرکارﷺ کا دَر مرکزِ پرکارِ یقیں ہے


ہر صبحِ مبیں ہے تِرے چہرے کی تجلّی
ہر شامِ حسیں سایۂ گیسوئے حِسیں ہے


جب تک نہ ہو اس جانِ عبادت کا تصور
واللہ عبادت کوئی مقبول نہیں ہے


اے ماہِ دنیٰ چُھوگئے جس کو تِرے جلوے
وہ ذرّۂ رہ، تاجِ سرِ مہرِ مبیں ہے


للہ مجھے روضۂ انور پہ بلا لو!!
بیتاب بہت اختؔرِ غمگین و حزیں ہے

Was this article helpful?
YesNo