Skip to main content
منقبت

یادِ قطب الدین بختیار کاکی

By November 1, 2020No Comments

یادِ قطب الدین بختیار کاکی
علیہ الرحمہ

گلِ باغِ پنجتن ، نورِ انجمن ولایت ، آفتابِ زہد و تقویٰ ، راز دار شریعت و طریقت ، بہار باغ چشتیت ، خلیفہ و محبوبِ خواجہ غریب نواز ، مرشد گنج شکر ، حضرت سید خواجہ قطب الدین بختیار کاکی علیہ الرحمہ (مَہرَولی شریف دلی ) کی شان…

غموں میں چین ، خِزاں میں بہار ، قطب الدیں
طبیبِ خَلقِ خدا ، بختیار قطب الدیں

زمانے والوں کو انسانیت کا درس دیا
کتابِ دل کے محبت نگار ، قطب الدیں

نقیبِ قافلۂِ عشقِ مصطفیٰ کہیے
دیارِ کفر میں حق کی پکار ، قطب الدیں

ہے اُن کی ذات سے انوارِ چشتیت کا فروغ
شَبِیہِ خواجۂ والا تَبار ، قطب الدیں

حَریمِ جلوۂ سادات ان کی ذاتِ کریم
حُسینی خون سے ہیں مُشکبار ، قطب الدیں

جبیں پہ نورِ ولایت ، جگر میں گَنجِ علوم
کمال و فضل کے ہیں شاہکار ، قطب الدیں

نگاہ ڈالی تو ناقص کو کردیا کامل
ہیں ایسے مرشدِ عالی وقار ، قطب الدیں

وہیں سے گنجِ شکر کو ملا عروج و کمال
جمال و نور کے ہیں آبشار ، قطب الدیں

وہ اب بھی علم و ہدایت کا نور بانٹتے ہیں
خدا پرستوں کے ہیں اعتبار ، قطب الدیں

سلام تجھ پہ اے دلّی کے شاہِ روحانی
سدا رَواں ہے ترا اقتدار ، قطب الدیں

کرے نہ فخر بھلا کیوں زمینِ “مَہرَولی”
ہے اس کی خاک پہ تیرا مزار ، قطب الدیں

دلوں سے تیری عقیدت کبھی نہ کم ہوگی
جہانِ عشق کے اے شہریار ، قطب الدیں

فدا ہیں جن کے نشیمن کی خاک پر تارے
تجلیوں کے ہیں وہ تاجدار ، قطب الدیں

فریدی کیف سا محسوس کر رہا ہوں میں
مرے لبوں پہ جو ہے بار بار قطب الدیں

از فریدی صدیقی مصباحی مسقط عمان