Skip to main content
قصیدہ

ہیں میرے پیر لاثانی محی الدین جیلانی

By September 8, 2021No Comments

قصیدہ

ہیں میرے پیر لاثانی محی الدین جیلانی
نبی کی شمع نورانی محی الدین جیلانی

علی کے لاڈلے  نور نگاہ حضرت زہرہ
رسول اللہﷺ کے جانی محی الدین جیلانی

لقب ہے قطب ربانی شرف محبوب سبحانی
ہے رخ قندیل نورانی محی الدین جیلانی

بلاد اللہ ملکی تحت حکمی سے ہوئی ثابت
جہاں میں تیری سلطانی محی الدین جیلانی

عزدم قاتل عند القاتل شان عالی ہے
نہیں کوئی تیرا ثانی محی الدین جیلانی

بجز تیرے شہِ بغداد کوئی اور کیا جانے
میرے دل کی پریشانی محی الدین جیلانی

فقیر قادری میں بادشاہ قادری تم ہو
ہو درد دل کی رومانی محی الدین جیلانی

خوشی سے کر دو مثلِ ورد میرے غنچہ دل کو
پئے سلطان سمنانی محی الدین جیلانی

تمہارا اک اشارہ ہو تو میرا کام بن جائے
رفع ہو ساری حیرانی محی الدین جیلانی

مدد کا وقت ہے مشکل کشائی کے لئے آؤ
ہے بحرِ غم میں ظغیانی محی الدین جیلانی

غلام درگہ والا ہے سالکؔ پھر کدھر جائے
سنانے رنج پنہانی محی الدین جیلانی