Skip to main content
نعت

گلبار داغِ ہجرِ نبیﷺ اس قدر رہے

By August 23, 2021No Comments

گلبار داغِ ہجرِ نبیﷺ اس قدر رہے
آٹھوں پہر بہشت بداماں نظر رہے


مجھ کو رہِ عدم میں نہ خوف و خطر رہے
یادِ جمالِ رُوئے نبیﷺ ہم سفر رہے


رہرو! رہِ حرم ہے ادب پر نظر رہے
آنسو یہاں کوئی نہ گرے چشم تر رہے


یارب! نہ زخمِ ہجرِ مدینہ ہو مُند مِل
یہ دِل الہٰ باد، محمّد نگر رہے


گم کر دے کاش ان کی محبت میں یوں خدا
اپنے وجود کی بھی نہ مجھ کو خبر رہے


دل کی تڑپ نہ کم ہو حضوری کے بعد بھی
یارب یہ دلنواز خلش عمر بھر رہے


اختؔر رہِ حیات میں پائی رہِ نجات
ہر گام پر اصولِ رضؔا راہبر رہے

Was this article helpful?
YesNo