Skip to main content
نعت

پاشکستہ تا درِ خیرالانامﷺ آ ہی گیا

By August 22, 2021No Comments

   پاشکستہ تا درِ خیرالانامﷺ آ ہی گیا
چلتے چلتے ہاتھ اس کو یہ مقام آ ہی گیا

صاحبِ وَالْفَجرﷺ کی زلفِ معنبر دیکھ کر
عقل میں حسنِ نظامِ صبح و شام آ ہی گیا

آپﷺ کی اس رحمتہٌ لّلعالمینی کے نثار
مجھ سے بَد کا بھی نکو کاروں میں نام آ ہی گیا

جوشِ وحشت باادب، شوقِ زیارت ہوشیار
ہیں جہاں ساجد فرشتے وہ مقام آ ہی گیا

جان دے کر یوسفِ قَوسَین کی رفتار پر
کچھ نسیمِ صبح کو طرزِ خرام آ ہی گیا

اب تخیّل کو حقیقت سے بدل سکتے ہیں آپ
بابِ رحمت پر بہر صورت غلام آ ہی گیا

بٹ رہی ہے چشمِ رحمت سے مئے لَاتَقْنَطُوْا
محفلِ محشر میں ہم تک دورِ جام آ ہی گیا

ہم نے مانا وہ نمازِ پنجگانہ ہی سہی
آگیا منکرِ کے لب پر بھی سلام آ ہی گیا

میں ہوا اختؔر ضیاؔء القادری کا جانشیں
میرا شغلِ نعت گوئی میرے کام آ ہی گیا

Was this article helpful?
YesNo