Skip to main content
نعت

شراب خلد کی اے دوست گفتگو کیا ہے ﷺ

By August 21, 2021No Comments

شراب خلد کی اے دوست گفتگو کیا ہے
زُلالِ شہ ہو میسّر تو یہ سبو کیا ہے


عذابِ نار خبر ہمیں کہ تو کیا ہے
مگر کسی کی شفاعت کے روبرو کیا ہے


خیال زلفِ رخِ شہ میں غرق رہتا ہوں
نہ پوچھئے مری دنیائے رنگ بو کیا ہے


جو تیری راہ میں پائیں قبولیت کا شرف
تو لاکھ جانیں بھی قرباں یہ اک گلو کیا ہے


خدا گواہ مری ہر مراد بر آئے
حضور اتنا جو کہہ دیں کہ آرزو کیا ہے


خلیؔل تجھ سا سیاہ کار اور نعتِ نبیﷺ
یہ فیض مرشدِ برحق ہے ورنہ تو کیا ہے

Was this article helpful?
YesNo