Skip to main content
نعت

اے جان جہاں تجھ کو ہے کچھ اس کی خبر بھی

By August 19, 2021No Comments

اے جان جہاں تجھ کو ہے کچھ اس کی خبر بھی
بے تاب ترے ہجر میں دل بھی ہے جگر بھی


تابندگئی نقش کفِ پا نہ پوچھئے
سائے کو جن کے پا نہ سکے شمش و قمر بھی


پرواز شہپر نبویﷺ کچھ نہ پوچھئے
پیچھے ہی ہو کے رہ گئے جبریل کے پر بھی


ہر سو ہے نظر اور تغافل ہے تو مجھ سے
اے حسن! ہے مشتاق تری میری نظر بھی


اخؔتر سبق ملا ہے یہ ہجر رسولﷺ سے
بنتے ہیں وجہ زیست کبھی سوز شرر بھی

Was this article helpful?
YesNo